24

جامعہ گجرات کے مرکز برائے میڈیا و کیمونیکشن سٹڈیز کے طلبہ و اساتذہ کی جانب سے سہیل وڑائچ کیساتھ ایک خصوصی نشست کا اہتمام

گجرات(نمائندہ فری ہینڈ نیوز)جامعہ گجرات کے مرکز برائے میڈیا و کیمونیکشن سٹڈیز کے طلبہ و اساتذہ کی جانب سے ممتاز کالم نگار، اینکر و سیاسی تجزیہ کار سہیل وڑائچ کے ساتھ ایک خصوصی نشست کا اہتمام کیا گیا۔ اس خصوصی نشست کے انعقاد میں شعبہ کی طلبہ سوسائٹی جرنلزم سٹریک نے خصوصی معاونت کی۔ اس نشست کامقصد صحافت ومیڈیا کے نوجوان طلبہ کی موضوعی و ابلاغی تربیت تھا۔ سہیل وڑائچ نے صحافت و میڈیا کے موجودہ تناظر میں نوجوان طلبہ کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ عصر حاضر میں صحافت و ابلاغ کے منظرنامہ میں از حد وسعت پیدا ہو چکی ہے۔ صحافت میں انفرادیت کے حصول کے لیے عزم صمیم ، جذبۂ کامل اور انتھک محنت راہنما کردار اداکرتے ہیں۔ ٹیکنالوجی کی ترقی و سعت نے موجودہ صحافت و ابلاغ کو لامحدود امکانات سے روشناس کروا دیا ہے۔ صحافی معاشرہ و سماج کا اہم حصہ ہیں۔ سہیل وڑائچ نے سوشل میڈیا کے حوالہ سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ آج کل سوشل میڈیا پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا کے مقابلہ میں زیادہ مقبول ہو رہا ہے مگر خبروں کی صداقت و سچائی کے لیے آج بھی عوام کو روایتی میڈیا پر ہی اعتبار ہے۔ صحافت میں غیر جانبداری آپ کے تجزیات کو بہتر بنانے میں کامیاب کردار ادا کرتی ہے۔ صحافت ومیڈیا کے میدان میں نوجوان لوگوں کی تعداد بڑھ رہی ہے جو ایک خوش آئند امر ہے۔سہیل وڑائچ نے صحافت و میڈیا سٹڈیز کے طلبہ کو نام و مقام بنانے کے لیے سخت محنت کی تلقین کی۔ انہوں نے بہترین صحافت و ابلاغ کے لیے مطالعہ کو شرط اوّل قرار دیا۔ ڈین آرٹس ڈاکٹر فریش اللہ یوسفزئی نے کہا کہ دیانتداری سے پیش کیا جانے والا تجزیہ مستقبل بینی میں راہنما کردار ادا کرتاہے۔ سہیل وڑائچ شعبہ صحافت میں ایک منفرد و ممتاز حیثیت کے مالک ہیں۔ انہوں نے ہمیشہ پاکستانی سیاسی صورتحال کو عمدہ طریقہ سے بیان کرتے ہوئے بے لاگ تجزیے پیش کیے ہیں۔ چیئر پرسنCMCSڈاکٹر زاہد یوسف نے مرکز کا ایک طائرانہ تعارف پیش کرتے ہوئے مرکز کے مختلف شعبہ جات اور سرگرمیوں کا جائزہ پیش کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں