66

FBR کے چھاپوں کے بعد ضلع بھر میں ڈاکٹرز کمیونٹی کی ہڑتال‘مریض ذلیل وخوار

کھاریاں(نمائندہ فری ہینڈ نیوز)’’مجبور ہیں اُف اللہ کچھ کہہ بھی نہیں سکتے‘‘FBR کے چھاپوں کے بعد ضلع بھر میں ڈاکٹرز کمیونٹی کی ہڑتال کے باعث ایک طرف ڈاکٹرز پریشان ہیں تو دوسری طرف مریض بھی ذلیل و خوار ہو رہے ہیں ضلع گجرات میں ڈاکٹروں کی ہڑتال چھٹے روز میں داخل ہو چکی ہے ایف بی آر نے مختلف ہسپتالوں میں چھاپے مارے اور ریکارڈ قبضے میں لے لئے تاکہ ٹیکس کا نظام بہتر بنایا جا سکے جس پر ڈاکٹروں نے ہڑتال کر دی جس کے بعد مریض ذلیل و خوار ہو رہے ہیں مریضوں کا کوئی پرسان حال نہیں سرکاری ہسپتالوں میں بھی اوپی ڈی بند ہے جبکہ PMA اور YDA نے نجی ہسپتالوں میں بھی کام بند کروا کرکھا ہے جس کے براہ راست اثرات مریضوں پر پڑ رہے ہیں اس ہڑتال سے عطائیوں کی موجیں لگی ہوئی ہیں لوگ MBBSڈاکٹروں کے بجائے اس دوران جعلی ڈاکٹروں کی خدمات حاصل کرنے پر مجبور ہیں عوامی حلقوں نے ڈاکٹروں کی اس ہڑتال کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ تمام بڑے بڑے ہسپتال جہاں روزانہ لاکھوں روپے کما رہے ہیں وہاں پر ٹیکس بھی ادا کریں اور مریضوں کو ذلیل و خوار نہ کریں جبکہ ذرائع سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ کچھ ڈاکٹرز خفیہ مقامات پر مریض چیک کر رہے ہیں اس ہڑتال سے ڈاکٹرز بھی پریشان ہیں کیونکہ ان کے کاروبار متاثر ہو رہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں