23

مولانا کے بیٹے نے گنڈا پور کا کونسا چیلنج قبول کیا؟

اسلام آباد(فری ہینڈ‌نیوز) مولانا اسعد محمود نے علی امین گنڈاپور کو کہا ہے کہ وہ قومی اسمبلی کی نشست خالی کرکے دوبارہ الیکشن لڑلیں۔ قومی اسمبلی میں آج ہوئے گرما گرم اجلاس میں مولانا اسعد محمود اور وفاقی وزیر علی امین گنڈاپور کے درمیان جملہ بازی اور تلخ کلامی بھی ہوئی جس میں مولانا اسعد نے علی امین گنڈاپور کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ میں بھی استعفیٰ دیتا ہوں، آپ بھی دیں اور کل ہم الیکشن لڑتے ہیں۔ اس پر علی امین گنڈاپور نے کہا کہ وہ آج بھی اپنے بیان پر قائم ہیں اور یہ کہ مولانا فضل الرحمٰن دھرنا ختم کریں، وہ کیمرے لگا کر الیکشن لڑیں گے۔ واضح رہے کہ علی امین گنڈاپور نے ایک بیان میں کہا تھا کہ جے یو آئی (ف) کے سربراہ اگر الیکشن کو جعلی کہتے ہیں تو وہ ان سے دوبارہ الیکشن لڑنے کا چیلنج قبول کریں۔ گزشتہ سال ہوئے عام انتخابات میں علی امین گنڈا پور نے این اے 38 ڈیرہ اسماعیل خان سے جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن کو 34 ہزار 779 ووٹوں کے فرق سے شکست دی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں