63

غیرت کے نام پر 9 سالہ بچی کا پتھر مار کر قتل

دادو(فری ہینڈ نیوز) سندھ کے ضلع دادو کی تحصیل جوہی میں 9 سال کی بچی کو مبینہ طور پر غیرت کے نام پر پتھر مار کر قتل کر دیا گیا۔ پولیس نے قتل کے الزام میں بچی کے باپ سمیت 3 افراد کو حراست میں لے لیا ہے، بچی کے والدین کا کہنا ہے کہ گل سماء کی موت سر پر پتھر لگنے سے ہوئی۔ دادو پولیس کے ترجمان عبدالرزاق کے مطابق بچی کی ہلاکت کا واقعہ کچھ دن قبل پیش آیا۔ پولیس کی جانب سے بچی کے باپ علی بخش رند، نماز جنازہ پڑھانے والے مولوی ممتاز لغاری اور کفن دفن کا انتظام کرنے والے ملزم کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔ پولیس نے سرکار کی مدعیت میں بچی کے قتل کا مقدمہ درج کر لیا ہے، مقتولہ بچی کی قبر کشائی کے لیے مقامی عدالت سے رجوع کیا جائے گا جس کے بعد پوسٹ مارٹم ہوگا۔ دوسری جانب بچی کے والدین کا کہنا ہے کہ بیٹی کھیل رہی تھی کہ کھیل کے دوران سر پر بھاری پتھر لگنے سے وہ انتقال کر گئی، بچی کے قتل کی باتیں غلط ہیں، حقیقت میں ایسا کچھ نہیں ہوا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں